بس اور کچھ نہیں

Published on (July 11, 2018)

بس اور کچھ نہیں
مجھے تم سے اب محبت نہیں رہی
کسی اور سے ہو گئی ہے
مگر تم غم نہ کرنا
مجھ میں خوفِ خدا ہے
میں تلافی کر وں گا
میں تمھارے نام ایک پلاٹ کر دوں گا
سونے کے ڈھیر سارے زیورات دلواؤں گا
ذیئزائنر کپڑوں کے ڈھیر لگا دوں گا
کتابوں کے آن لائن آرڈر بک کروادوں گا
تم جو کہوں گی وہ دلا دوں گا
بولو کیا مانگتی ہو ؟
اس نے بوتل میں بھرے وہ رنگ برنگے پتھر
جو محبت کے نرم دنوں میں دونوں نے اکھٹے کئے تھے
اس کے آگے کر دئے اور چٹان سی سختی سے بولی
ان پتھروں کو پہلے جیسا نرم کر دو ۔۔۔۔۔

1
Leave a Reply

avatar
1 Comment threads
0 Thread replies
0 Followers
 
Most reacted comment
Hottest comment thread
1 Comment authors
Mehmooda Recent comment authors
  Subscribe  
newest oldest most voted
Notify of
Mehmooda
Guest
Mehmooda

Mohabat main suna tha bhok nahi lagti …..neend na ati ….tary ginty hain ….mohabat main bohat si different filling suni thi ….magar Phali dafa suna or bohat zabardast tashbih lagi k patar bhi naram hoty ……jo mohabat k zamany main Chunain jaty hain……zabrdast 👍👍👍👍👍👍👍👍Robina ji